7 ماہ کے دوران 754 ارب روپے سے زائد کی کھانے پینے کی اشیاء درآمد

اسلام آباد پاکستان نے 7 ماہ میں 754 ارب 94 کروڑ روپے کی کھانے پینے کی اشیاء درآمد کی گئیں۔
ادارہ شماریات کی طرف سے جاری کردہ رپورٹ کے مطابق کھانے پینے کی اشیاء کی درآمد میں گزشتہ سال کے اسی عرصے کے مقابلے 278 ارب روپے 19 کروڑ روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ گذشتہ سال جولائی تا جنوری کھانے پینے کی اشیاء کی درآمد کا حجم 476 ارب 74 کروڑ 50 لاکھ روپے تھا۔
ادارہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق جولائی تا جنوری چینی کی درآمد میں 7 ہزار فیصد سے زائد کا اضافہ ہوا۔ رواں سال جولائی تا جنوری 20 ارب 60 کروڑ روپےکی چینی درآمد کی گئی۔ گزشتہ سال اسی عرصے میں 29 کروڑ روپے کی چینی درآمد کی گئی تھی۔ جولائی تا جنوری 127 ارب 96 کروڑ روپے کی گندم درآمد کی گئی۔ گذشتہ سال اس عرصے میں گندم کی درآمد زیرو تھی۔

ادارہ شماریات کے مطابق خشک میوہ جات کی درآمد میں سالانہ بنیادوں پر 192.14 فیصد اضافہ ہوا، جولائی تا جنوری 9 ارب 66 کروڑ 70 لاکھ روپے کے خشک میوہ جات درآمد کئے گئے۔ گزشتہ سال اسی عرصے میں 3 ارب 31 کروڑ روپے کے میوہ جات درآمد کئے گئے تھے۔ 7ماہ میں 222 ارب 82 کروڑ 70 لاکھ روپے کا خوردنی تیل درآمد کیا گیا۔ گزشتہ سال اسی عرصے میں 156 ارب 25 کروڑ 50 لاکھ روپے کا خودرنی تیل درآمد کیاگیاتھا۔

رپورٹ کے مطابق 7 ماہ میں مصالحوں کی درآمد میں 36.19 فیصد اضافہ ہوا۔ سالانہ بنیادوں پر 7 ماہ میں چائےکی درآمد میں 27.71 فیصد اضافہ ہوا۔ جولائی تا جنوری 54 ارب 85کروڑ روپے کی چائے درآمدکی گئی۔ گزشتہ سال اسی عرصے میں 42 ارب 95 کروڑ روپے کی چائے درآمد کی گئی تھی۔

ادارہ شماریات کے مطابق مالی سال کے 7 ماہ میں 53 ارب 82 کروڑ 60 لاکھ روپے کی دالیں درآمد کی گئیں۔ گزشتہ سال اسی عرصے میں 48 ارب 69 کروڑ 40 لاکھ روپے کی دالیں درآمد کی گئی تھیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں