شاہ محمود قریشی دو روزہ سرکاری دورے پر برلن پہنچ گئے

برلن ()وزیر خارجہ مخدوم شاہ محمود قریشی وفد کے ہمراہ دو روزہ سرکاری دورے پر برلن (جرمنی ) پہنچ گئے ۔برلن ہوائی اڈے پر، جرمنی میں تعینات پاکستانی سفیر ڈاکٹر محمد فیصل ، جرمنی کی وزارتِ خارجہ کے اعلیٰ حکام اور سفارتخانے کے سینئر افسران نے وزیر خارجہ کا خیر مقدم کیا۔
وزیر خارجہ نے کہا کہ جرمنی، دنیا کی اہم اقتصادی اور سیاسی قوت ہے ،جرمنی کے ساتھ پاکستان کی وابستگی، تاریخی نوعیت کی ہے، مفکر پاکستان ڈاکٹر علامہ اقبالؒ نے نہ صرف یہاں اعلیٰ تعلیمی مراحل مکمل کئے بلکہ انہوں نے گوئٹے اور “فریڈرک نیچے “جیسے عظیم دانشوروں کی فکر سے بھی استفادہ کیا ،پاکستان کی یورپی ممالک کے ساتھ ہونے والی دو طرفہ تجارت کے حجم میں، سب سے زیادہ حصہ جرمنی کا ہے-
زیر خارجہ، پاکستانی سفارتخانے کا دورہ کریں گے اور جرمنی میں مقیم پاکستانی کمیونٹی سے ملاقات کریں گے توقع ہے کہ پاکستان اور جرمنی کے مابین دو طرفہ سفارتی تعلقات کی سترہویں سالگِرہ کے موقع پروزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا یہ دورہ، دو طرفہ تعلقات کو مزید مستحکم بنانے اور دو طرفہ کثیرالجہتی تعاون کے فروغ کے لئے سنگ میل ثابت ہوگا۔
برلن ہوائی اڈے پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہاکہ مجھے خوشی ہے کہ میں جرمنی کے دارالحکومت برلن پہنچا ہوں،آج انشاءاللہ میری بزنس لیڈر اور کمیونٹی کے لوگوں سے ملاقات ہو گی،ایک لاکھ سے زائد پاکستانی جرمنی میں قیام پذیر ہیں اور یہاں بہت مثبت کردار ادا کر رہے ہیں ،معاشی سفارت کاری اور ٹیکنالوجی کے تبادلے کو ہم آگے بڑھانا چاہتے ہیں، اس حوالے سے یہاں کی قیادت سے بات چیت ہو گی ۔ انہوں نے کہاکہ پیر کو جرمنی کے وزیر خارجہ سے ملاقات ہوگی اور اہم علاقائی و عالمی امور پر تبادلہ خیال کا موقع ملے گا ،میری جرمن پارلیمان کے صدر وولف گانگ شوئبلے سے بھی ملاقات ہو گی ،میں چونکہ خود ایک پارلیمنٹرین ہوں ، پارلیمان ایک پالیسی ساز ادارہ ہے ،ہم چاہتے ہیں جرمنی کے ساتھ پارلیمانی سطح پر ہمارے تعلقات میں وسعت آئے اور پہلے سے موجود فرینڈشپ گروپس مزید فعال ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں