ٹوکیو اولمپکس کیلئے پاکستانی دستے میں کھلاڑی کم آفیشلز زیادہ

پاکستان اولمپک ایسوسی ایشن (پی او اے) نے ٹوکیو اولمپکس کیلئے 22 رکنی دستے کا اعلان کردیا ، دستے میں کھلاڑی کم اور آفیشلز زیادہ ہیں۔

اولمپکس کے لیے اعلان کردہ پاکستانی دستے میں 10 ایتھلیٹس اور 12 آفیشلز شامل ہیں۔

ٹوکیو اولمپکس میں پاکستانی ایتھلیٹس6 مختلف کھیلوں کے 9 ایونٹس میں شریک ہوں گے ۔

ایتھلیٹکس میں ارشد ندیم اور نجمہ پروین، بیڈمنٹن میں ماحور شہزاد ، جوڈو میں شاہ حسین شاہ پاکستان کی نمائندگی کریں گے۔

گلفام جوزف، خلیل اختر اور غلام مصطفیٰ بشیر پر مشتمل تین رکنی شوٹنگ ٹیم 2مختلف ایونٹس میں حصہ لے گی ۔

اس کے علاوہ بسمہ خان اور حسیب طارق سوئمنگ ، طلحہ طالب ویٹ لیفٹنگ میں ملک کی نمائندگی کریں گے ۔ دستے مٰیں شامل جوڈو کا شاہ حسین شاہ جاپان میں مقیم ہیں اور وہ براہ راست اولمپک ولیج جوائن کریں گے۔

بریگیڈیئر ظہیر اختر بطور چیف ڈی مشن دستے میں شامل ہیں جبکہ دستے میں 2کووڈ لائژن آفیسرز کوبھی شامل کیا گیا ہے، محمد ناصر اعجاز تونگ بطور ایڈمن آفیسر کنٹنجنٹ آفیشلز میں شامل ہیں۔

حیران کن طور پر 2 اسپورٹس فیڈریشنز کے اعلیٰ عہدیداران کو بطور ’پلیئر سپورٹ پرسونیل‘ یعنی کوچ یا ٹرینر کے طور پر اپنے متعلقہ کھیل میں نمائندگی کرنے والے کھلاڑیوں کے ساتھ ٹوکیو بھیجا جارہا ہے۔ ان میں بیڈمنٹن فیڈریشن کے سیکریٹری واجد علی چوہدری اور ویٹ لیفٹنگ فیڈریشن کے صدر حافظ عمران بٹ شامل ہیں۔

کھلاڑیوں کی روانگی کا سلسلہ 16 جولائی سے شروع ہوگا جبکہ بیڈمنٹن، شوٹنگ اور سوئمنگ کے پلیئرز 16 جولائی ، ایتھلیٹکس کے کھلاڑی 22 جولائی اور ویٹ لفٹنگ کے پلیئر اور آفیشلز 21 جولائی کو ٹوکیو روانہ ہوں گے۔

45 برس بعد اولمپکس میں پاکستان کی نمائندگی پر فخر ہے: ویٹ لفٹر طلحہ طالب

دوسری جانب پی او اے کے سیکریٹری خالد محمود نے شوٹنگ ٹیم میں شامل ارشد ندیم اور طلحہ طالب کو میڈل کی اُمید قرار دیاہے ۔

اُن کا کہنا ہے کہ شوٹرز اور جویلن تھرو کے ارشد ندیم نے براہ راست اولمپکس کیلئے کوالیفائی کیا اور ان کی تیاریاں کافی اچھی ہیں، ان کے ساتھ ساتھ انوی ٹیشنل پلیس پر جگہ پانے والے طلحہ طالب بھی میڈل حاصل کرسکتے ہیں۔

خالد محمود کے مطابق اولمپکس میں کھلاڑیوں کے ہر روز کووڈ ٹیسٹ ہوں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں