چین کورونا کی ابتدا سے متعلق تحقیقات میں دوبارہ تعاون کرے: ڈبلیو ایچ او

عالمی ادارہ صحت نے چین پر ایک بار پھر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ بیجنگ کورونا کی ابتدا سے متعلق تحقیقات میں دوبارہ تعاون کرے۔

سربراہ ڈبلیو ایچ او نے کہا ہے کہ دنیا میں لاکھوں افراد وبا سے متاثر ہوئے، وبا کی حقیقت جاننا ان کا حق ہے تاہم وائرس لیبارٹری سے لیک ہوا یہ کہنا قبل از وقت ہو گا۔

خبر ایجنسی کے مطابق رواں سال کے آغاز پر ڈبلیو ایچ او نے تحقیقات کے لیے اپنا مشن ووہان بھیجا تھا، مشن نے اپنی رپورٹ میں کہا تھا کہ وائرس جانور سے انسان کو منتقل ہوا۔

یہ بھی پڑھیں
ڈبلیو ایچ او نےکورونا پھیلنےکا ذمہ دار عالمی رہنماؤں کو قرار دے دیا
چین میں کورونا وائرس کے کسی جانور سے پھیلنے کے شواہد نہیں ملے، عالمی ادارہ صحت
امریکی صدر اور دیگر عالمی رہنماؤں نے ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ پر عدم اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے مزید تحقیقات کا مطالبہ کیا تھا۔

خیال رہے کہ دنیا بھر میں پھیلے کورونا وائرس سے اب تک لاکھوں افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں اور یہ وائرس سب سے پہلے چین کے شہر ووہان میں رپورٹ ہوا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں