مایا علی نے باڈی شیمنگ پر بات کرنے والوں کو آڑے ہاتھوں لے لیا فائل فوٹو فائل فوٹو معروف اداکارہ مایا علی کا کہنا ہے کہ باڈی شیمنگ کرکے ہم لوگوں پر سوال نہیں بلکہ انسان کو پیدا کرنے والے پر سوال کررہے ہوتے ہیں۔

لاہور(شوبز رپورٹر)معروف اداکارہ مایا علی کا کہنا ہے کہ باڈی شیمنگ کرکے ہم لوگوں پر سوال نہیں بلکہ انسان کو پیدا کرنے والے پر سوال کررہے ہوتے ہیں۔مایا علی نے کہا کہ لوگ ویسے تو مذہب اور اسلام کی بات کرتے ہیں لیکن ہم کوئی لباس پہنیں یا کوئی بھی بات کہہ دیں تو دوسرے لوگ کہنا شروع ہوجاتے ہیں کہ یہ ہمارے مذہب کا حصہ نہیں ہے۔اداکارہ نے کہا کہ جس ذات نے پوری دنیا میں موجود لوگوں کو بنایا ہے، کسی کا گہرا رنگ ہے، کسی کا ہلکا رنگ ہے، کوئی موٹا ہے اور کوئی دبلا ہے، کسی کے بال لمبے ہیں تو کسی کے چھوٹے ہیں۔مایا نے باڈی شیمنگ کی نشاندہی کرتے ہوئے کہا کہ لوگ فوراً کہنا شروع ہوجاتے ہیں کہ یہ موٹی ہے یا یہ دبلی ہے، یہ کالی کیوں ہے، اس وقت اس بندے پر سوال نہیں کیا جارہا ہوتا بلکہ جس نے اسے بنایا ہے اس پر سوال کررہے ہوتے ہیں تو یہ سب بھی ہمارے مذہب کا حصہ نہیں ہے۔اداکارہ کا کہنا تھا کہ باڈی شیمنگ صرف موٹاپا نہیں ہوتا بلکہ لوگوں کو یہ کہنا کہ آپ بہت پتلی ہوگئی ہیں یہ بھی تکلیف دہ ہوسکتا ہے، ہر انسان اس دنیا میں خوبصورت ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں