اب ایپل اپنے صارفین کے آئی فون کو خود اسکین کرے گا

امریکی موبائل کمپنی ایپل نے آئی فون صارفین کی ڈیوائس میں موجود بچوں کے جنسی استحصال پر مبنی تصاویر کی تلاش کرنے کا سسٹم بنانے کااعلان کیا ہے۔

کمپنی کا کہناہے نیاسسٹم ، صارف کے آئی فون کو اسکین کرسکے گا، اگر بچوں کے جنسی استحصال سے متعلق تصاویر ہوئیں تو اسے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو رپورٹ کردے گا۔

شیاؤمی نے ایپل کو بھی پیچھے چھوڑ دیا

دوسری جانب ماہرین نے نئے سسٹم پر پرائیوسی خدشات کا اظہار کر دیا ہے۔

ایپل کمپنی کےمطابق نیا سسٹم صارف کی ڈیوائس میں موجود بچوں کے جنسی استحصال پر مبنی تصاویر iCloud Photos پر محفوظ ہونے سے قبل اسے تلاش کرکے قانون نافذ کرنے والے اداروں کو رپورٹ کرسکے گا۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ اس بارے میں راز داری کے خدشات ہیں کہ ٹیکنالوجی کے استعمال کا دائرہ ممنوعہ مواد یا سیاسی تقریر کے لیے فون کو اسکین کرنے کے لیے بھی بڑھایا جاسکتا ہے۔

ماہرین کو یہ بھی خدشہ ہے کہ اس ٹیکنالوجی کو آمرانہ حکومتیں شہریوں کی جاسوسی کے لیے استعمال کر سکتی ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں