جعلی ڈگریوں والے وکلاء سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا.فرحان شہزاد

پورے سسٹم کو آن لائن کر کےسیکیورٹی فیچر کارڈ متعارف کروائیں گے
14وکلاء کیخلاف جعلی ڈگریوں کی ایف آئی آر درج ہو چکی۔وائس چیئرمین پنجاب بار کونسل
لاہور( افضل ایوبی سے )پنجاب بار کونسل کے وائس چیئرمین فرحان شہزاد نے کہا ہے کہ جعلی ڈگری والے وکلاء سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا ، جعلی ڈگری پر 14وکلاء کے لائسنس معطل کر کے ان پر ایف آئی آر کا اندراج کرایاگیا ہے ،سارا نظام آن لائن اور سکیورٹی فیچر کارڈ کا اجراء جلد کیا جائے گا ۔وائس چیئرمین کا عہدہ سنبھالنے پر مبارکباد دینے آنے والے وکلاء کے وفود سے گفتگو کرتے ہوئے فرحان شہزاد نے کہا کہ ہم نے اس ادارے کی عزت و تکریم میں مزید اضافہ کرنا ہے اور یہ اسی صورت ممکن ہے جب ہم شفافیت کو لائیں گے ۔ وکلاء کے دیرینہ مسائل کے حل کے لئے ہر ممکن اقداما ت اٹھائے جائیں گے اور اس کیلئے بغیر وقت ضائع کئے عملی پیشرفت شروع کر دی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جعلی ڈگری والے وکلاء سے آہنی ہاتھوں سے نمٹا جائے گا کیونکہ ایسے لوگ ادارے کے لئے سبکی کا باعث ہیں ، پنجاب بار کونسل نے جعلی ڈگری پر 14وکلاء کے لائسنس معطل کر کے ان پر ایف آئی آر کا اندراج بھی کرایا ہے اور یہ غیر معمولی اقدام ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم اپنے نظام کو آئن لائن کر رہے ہیں جس سے بہت سے مسائل حل ہوں گے،سکیورٹی فیچر کارڈ کا اجراء بھی منصوبہ بندی میں شامل ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں