پی ڈی ایم کا کراچی میں پاور شو، اسلام آباد کی جانب مارچ کا اعلان

کراچی میں اپوزیشن جماعتوں پر مشتمل اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) نے عوامی طاقت کا مظاہرہ کیا۔
پی ڈی ایم نے قائد اعظم کے مزار کے سامنے باغ جناح میں میدان سجایا اور یہ اتحاد کا پیپلزپارٹی کے بغیر کراچی میں پہلا پاور شو تھا۔جلسے میں سیکڑوں کارکنان نے شرکت کی اور حکومت کے خلاف شدید نعرے بازی کی۔
جمعیت علمائے اسلام اور پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمان اور مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف سمیت دیگر قائدین نے جلسہ عام سے خطاب کیا۔اس کے علاوہ ن لیگ کے قائد نواز شریف نے بھی لندن سے بذریعہ ویڈیو لنک جلسہ عام سے خطاب کیا۔
مولانا فضل الرحمان کا اسلام آباد کی طرف مارچ کا اعلانجلسہ عام سے خطاب میں سربراہ اتحاد مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ جعلی حکمرانوں کے تین سالوں میں پاکستانی ریاست کوغیرمحفوظ ریاست بنادیا ہے اور موجودہ حکمرانوں نے پاکستانی قوم کوغیرمحفوظ قوم بنادیا ہے، آج دنیا آگے بڑھ رہی لیکن پاکستان پیچھے دھکیل دیا گیا ہے، ایسی صورتحال میں خاموش تماشائی نہیں رہ سکتے۔
ان کا کہنا تھاکہ محرم کا مہینہ یہی بتاتا ہے کہ یزید کے ہاتھوں پربیعت نہیں کرنی، یہ ناجائزحکومت ہے اس کوکوئی عوامی مینڈیٹ حاصل نہیں۔
مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھاکہ عمران خان نے ملک کوکہاں پہنچادیا ہے؟ لوگوں اٹھو،انقلاب لاؤ، انقلاب کے علاوہ کوئی اور راستہ نہیں۔علاوہ ازیں جلسہ عام سے خطاب میں شہباز شریف کا کہنا تھاکہ مارچ 2019 میں عمران نیازی نے سندھ کیلئے 162 ارب روپے کی ترقیاتی پیکج کا اعلان کیا تھا لیکن عمران نیازی نے چند ٹکوں کے علاوہ سندھ کی ترقی کیلئے رقوم مہیا نہیں کیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں