فیس بک کے بعد شیاؤمی نے بھی اسمارٹ چشمے متعارف کروادیے

اسمارٹ فون بنانے والی چینی کمپنی شیاؤمی نے بھی اپنے اسمارٹ چشمے متعارف کروادیے۔

شیاؤمی نے فیس بک کی جانب سے متعارف کروائے گئے اسمارٹ چشمے رے بین اسٹوریز کے ایک ہفتے بعد ہی اپنے اسمارٹ چشمے متعارف کروا دیے ہیں۔
شیاؤمی کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ان اسمارٹ چشموں کو فی الحال فروخت کرنے کا کوئی منصوبہ نہیں ہے لیکن شیاؤمی نے کافی تفصیل فراہم کی ہے تاکہ مستقبل میں اس طرح کی پروڈکٹس کسی حد تک قابل فہم نظر آئیں۔

فیس بک اور رے بین نے جدید اسمارٹ چشمے متعارف کرادیے

شیاؤمی کا دعویٰ ہے کہ اسمارٹ چشمے اسمارٹ فونز کے لیے صرف ‘دوسری اسکرین’ نہیں بلکہ یہ 497 اجزاء بشمول چھوٹے سینسر اور مواصلاتی موڈیول کو ضم کرتا ہے۔

شیاؤمی کے ان اسمارٹ چشموں کا وزن 51 گرام ہے جب کہ ان میں مائیکرو ایل ای ڈیز کا استعمال کیا گیا ہے جو شاندار ڈسپلے فراہم کرتی ہیں۔

شیاؤمی کے اسمارٹ چشموں میں کواڈ کور اے آر ایم ( quad-core ARM ) پروسیسر استعمال کیا گیا ہے جو کہ اینڈرائیڈ پر چلتے ہیں۔ اس کے علاوہ ان اسمارٹ چشموں میں نیوی گیشن کی صلاحیت بھی موجود ہے جس کی مدد سے آپ ان چشموں کوپہن کر کسی بھی جگہ کا راستہ معلوم کرسکتے ہیں۔

یہ چشمے آپ کے موبائل پر کال کرنے والے کے نمبر کو بھی ظاہر کریں گے جس سے آپ کو معلوم ہوسکے گا کہ کون کال کررہا ہے، اس کے ساتھ ساتھ آپ ان اسمارٹ چشموں میں مائیک اور اسپیکر کی مدد سے کال کو سن بھی سکتے ہیں۔

مائیک آپ کی آواز کو سننے کے ساتھ ساتھ اسے ٹرانسلیٹ بھی کرسکتا ہے جب کہ ان اسمارٹ چشموں میں موجود ٹرانسلیشن کا فیچر لکھے ہوئے لفظوں (TEXT) کو بھی کیمرے کی مدد سے ٹرانسلیٹ کرسکتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں